The Holy of Allah "Injeel"

 انجیل

انجیل اللہ کی بھیجی گئ کتاب ہے جو حضرت عیسی علیہ السلام پر نازل ہوئ ۔ یہ کتاب بھی بنی اسرائیل کی ہدایت کےلے بھیجی گئ تھی ۔ مگر بنی اسرائیل قوم نے ہدایت نا پانے کی قسم کھا رکھی تھی ۔

  

لفظ انجیل یونانی زبان کا لفظ ہے مگر علماء لسانیات اور تاریخ کہتے ہیں کہ لفظ انجیل بھی عبرانی زبان کا ہے کیونکہ یہ کتاب بنی اسرائیل کی طرف بھیجی گئ تھی اور اسرائیلوں کی زبان عبرانی تھی ۔ اس کی گواہی قرآن کچھ یوں دیتا ہے :

 

ہم نے رسول کو وہی زبان دی جو اس کی قوم کی تھی

 

سورۃ ابرہیم : آیت 07

انجیل کے لفظی معنی ہیں خوش خبری کی باتیں حضرت عیسی علیہ السلام بنی اسرائیل قوم کے آخری نبی تھے اور قوم کو راہ ہدایت کے ساتھ ساتھ خوش خبری دی اس لے اس کتاب کے نام کے معنی بھی یہی ہیں انجیل ۔ لفظ انجیل قرآن پاک میں بارہ بار ذکر ہوا ہے ۔  کتاب انجیل میں وعظ و نصیحت اور اخلاقی تعلیمات پر زور دیا گیا ہے اور زیادہ ذکر کیا گیا ہے تاکہ بنی اسرائیل کے اخلاقیات بہتر سے بہترین ہو سکیں ۔

 

تورات زبور اور انجیل پر ایمان لانا ضروری ہے مگر ان کی تعلیمات پر عمل نہیں کیا جا سکتا کیونکہ عیسائیوں, یہودیوں نے اس میں تحریف یعنی ردو بدل کیا ہے ۔ اور زیادہ تر تعلیمات کو بگاڑ کر رکھ دیا ہے ۔ یہ الہامی کتابیں اپنی درست شکل میں موجود نہیں ہیں ۔

Multiple Choice Questions

1 The Bible literally means:

(a) good news 

(b) bad habits 

(c) bad news 

(d) fruitful 

2 How many times is the Bible mentioned in the Qur'an?

(a) 45

(b) 63

(c) 12

(d) 09

3 What language is the gospel?

(a) hebrew

(b) English 

(c) Persia 

(d) Urdu 

4 Is the gospel in its proper form?

(a)  yes 

(b)  no 

(c) else 

(d) none 

5 To which prophet did the gospel be revealed?

(a) Hazrat esia 

(b)  Hazrat Noah 

(c) Hazrat Ismail 

(d) Hazrat yahya 

Answers

1 a

2 c

3 a

4 a

5 a

The Holy of Allah "Injeel" The Holy of Allah "Injeel" Reviewed by Syed Daniyal Jafri on August 26, 2020 Rating: 5

No comments:

Powered by Blogger.