Crips Mission 1942


کرپس مشن 1942
ء


1942ء کے ابتداء کے ایام میں جب برِصغیر

 میں برطانوی مقبوضات ان کےہاتھ سے نکلتے محسوس ہوۓ تو انہوں نے ہندوستان کی عوام کو  مطمٸن کرنے کے لیے 22مارچ 1942ء کوسر اسٹیفورڈ کرپس کی سربراہی میں ایک مشن ہندوستان روانہ کیا ۔ جس کا مقصد ہندوستان کے سیاسی رہنماٶں کے ساتھ بات چیت کرکے ہندوستان کے آٸینی مساٸل کا حل نکالنا تھا۔ سر کرسپ نے قاٸدِ اعظم , نہرو, گاندھی, ابوالکلام آزاداور متعدد شخصیات سے ملاقاتیں کیں۔ اور اپنی تجاویز پیش کیں جو کہ کرپس تجاویز کہلاتی ہیں۔

ان تجاویز میں کہا گیا کہ حکومت برطانیہ ہندوستان میں ایک نٸی وفاقی مملکت قاٸم کرنا چاہتی ہے جس کو دولت مشترکہ کے دوسرے رکن ممالک کے برابر ڈومینین کا درجہ حاصل ہوگا۔ وہ رسمی طور پر تاج برطانیہ کا وفادار ہوگا تاہم اپنے داخلی اور خارجی امور میں کسی ملک کا ذیر دست نہ ہوگا۔

اگرچہ کرپس  تجاوزات میں مطالبہ پاکستان مان لیا گیا تھا لیکن پھر بھی جناح صاحب پوری طرح مطمٸن نہیں ہوسکے۔

سکھوں نے بھی ان تجاوزات کو سرے سے مسترد کردیا اور اسے ہندوستانی یکجہتی پر ضرب اور ان کےمقاصد کے ساتھ  دھوکے بازی کے ساتھ تعبیر کیا۔

کرپس تجاویز  مسلم لیگ اور کانگریس کے علاوہ دوسری سیاسی جماعتوں نے بھی مسترد کردی۔ 

12 اپریل 1942ءکو سر اسٹیفورڈ کرپس وطن واپس لوٹ گۓ۔

Crips Mission 1942 Crips Mission 1942 Reviewed by Syed Daniyal Jafri on September 04, 2020 Rating: 5

No comments:

Powered by Blogger.